No Picture

قران شمس و عطارد

October 2, 2010 admin 0

اس سعد وقت کی ابتداء ۱۵ اکتوبر ۸ بجکر ۲۲ منٹ پر ہوگی تکمیل نظر ۱۷ اکتوبر چھ بجکر چار منٹ جبکہ خاتمہ نظر کا وقت ۱۸ اکتوبر ۱۶بجکر ۳۴منٹ ہے۔
ڈپریشن سے نجات ، بلڈ پریشر اور دماغی کمزوری کے علاج کے لئے ایک بہتر وقت ہے

No Picture

طلسم ہیکل سلیمانی۱

October 1, 2010 admin 0

آج سے چند ماہ قبل قارئین کو یاد ہوگا کہ طلسم شفاء الامراض کے نام سے ایک عنوان شروع کیا گیا تھا جو کہ علامہ محمد رفیق زاہد مرحوم کی کتاب قانون طلسمات سے نقل کیا گیا تھا ۔ درحقیقت علامہ مرحوم علم کی اس بلندی پر پرواز تھے جہاں تخیل کے پر بھی جلا کرتے ہیں ۔ علامہ مرحوم نے قدیم نایاب و صدری اعمال جو کہ عبرانی و سریانی زبان میں تھے پر کافی تحقیق کی اور اسے پیش کیا ۔ علامہ صاحب کے وہ اعمال جو سہل الحصول ہونے کے علاوہ ممکن العمل تھے انہیں میں نے ذاتی طور پر استعمال کیا اور حرف بحرف درست پایا ۔ حقیقت یہ ہے کہ اگر علامہ محمد رفیق زاہد مرحوم سے رابطہ نہ ہوتا تو شاید میں اس پرخار دشت میں بھٹکتا رہتا ۔ اس ماہ سے ہم ایک نیا سلسلہ بعنوان “طلسم ہیکل سلیمانی ” قسط وار صورت میں تحریر کر رہے ہیں عمل ہٰذا علامہ مرحوم کی کتاب انوار طلسمات سے لیا گیا ہے ۔ تمام قارئین سے مرحوم کی بلندی درجات کے لئے سورہ فاتحہ پڑھنے کی گزارش کی جاتی ہے

No Picture

اعداد متحابہ

September 6, 2010 admin 0

اخلاق جلالی میں علامہ ملا جلال الدین محقق دوانی نے تحریر فرمایا ہے کہ عشق نفسانی کا مبداء تناسب روحانی سے ہوتا ہے اور یہ عشق جنس زائل سے نہیں۔ اسی طرح اعداد کی مخفی قوتوں کے متعلق علامہ ابن خلدون نے اپنی مشہور کتاب مقدمہ میں سحر و طلسمات کے باب میں اس کا تفصیل سے تذکرہ کیا ہے لکھتے ہیں کہ میں نے خود ان اعداد میں عجیب وغریب تاثیر دیکھی ہے ۔ چنانچہ انہوں نے چند اعمال کا تذکرہ بھی کیا ہے ۔ جو اس وقت کے عاملین کام میں لاتے تھے ۔ صاحب کتاب غائت الحکیم نے بھی جو اس فن کے امام مانے جاتے تھے ان اعداد کے اثرات کا دعویٰ کیا ہے ۔ ۔ آئیے آپ کو ان اعداد سے کام لینے کا طریق بیان کریں ۔

No Picture

طلسم اسمائے جلجلوتیہ الکبریٰ (۱)۔

July 10, 2010 admin 0

طلسم اسمائے جلجلوتیہ الکبری کا تعارف ۔ اس کے خواص ۔
جو حضرات عملیات کے شعبہ سے وابستہ ہیں وہ بخوبی جانتے ہیں کہ علامہ محمد رفیق زاہد مرحوم کا نام کسی تعارف کا محتاج نہیں ۔ مرحوم نے طلسمات کے باب پر کافی ریسرچ کی اور چند کتابوں کی صورت میں عوام الناس کے سامنے اپنی ریسرچ کو پیش کیا ، مرحوم کی مشہور کتب میں قانون طلسمات، بوستان طلسمات، انوار طلسمات ، طلسمات کی دنیا ، طلسمات رفیق ارباب فن سے داد و تحسین حاصل کر چکی ہیں ۔ مرحوم سے میرے تعلقات کافی قریبی رہے اور ایک عرصہ تک ان سے فیض یاب ہوتا رہا ۔ لیکن میرے علم میں بھی یہ بات نہیں تھی کہ مرحوم نے طلسم اسمائے جلجلوتیہ الکبریٰ پر باقاعدہ کوئی کتاب تحریر کی ہو ، گو کہ طلسم ہٰذا پر چند رسائل میں مرحوم نے مختصراََ تعارف و خواص ضرور پیش کئے تھے ۔ گزشتہ دنوں انڈیا سے ایک علمی شخصیت نے ان کی اس کتاب کی جانب توجہ مبذول کرواتے ہوئے کتاب بھی روانہ کردی ۔ طلسم اسمائے جلجلوتیہ الکبریٰ پر ایک جامع تحریر کہوں تو بے جا نہ ہوگا ۔ میں چاہتا ہوں کہ میرے ساتھ ساتھ قارئین کے علم میں بھی اضافہ ہو اور اپنے دینی و دنیاوی کاموں میں اس حیرت انگیز طلسم سے کام لے سکیں ۔ لہٰذا طلسم اسمائے جلجلوتیہ الکبریٰ قسط وار سلسلہ کے طور پر پیش خدمت ہے ۔ جو حضرات اس سے مستفید ہوں ان سے درخواست کروں گا کہ مرحوم کی بلندی درجات کے لئے ایک مرتبہ سورہ فاتحہ و تین مرتبہ سورہ اخلاص پڑھ کر مرحوم کی روح کو بخش دیں ۔