Naqsh Baraey Shadi | نقش برائے شادی

ابتداء سے کوشش رہی ہے کہ عمل  وہ شائع کیا جائے جواپنے اثرات کے اعتبار سے  قارئین کی دل کی گہرائیوں میں اتر تا چلا جائے ۔ قارئین خود کو فائد ہ دے کر دوسروں کو بھی فائدہ پہنچا سکیں۔

نقش بنانا اور حروف کی قوت سے تاثیر پیدا کرنا علمائے روحانیت کا کام ہے مگر آج کے موجودہ دور میں بہت سے وہ کام جو کسی دور میں نا ممکن رہے تھے اب ممکن ہو چکے ہیں ، یوٹیوب اور گوگل سرچنگ نے بے شمار چیزوں کو آپ کے سامنے ظاہر کردیا ہے جہاں بے شمار آسانی میسر آئی ہیں وہیں قدرے مشکلات کا بھی سامنا ہے ، کل تک اعمال و طریقہ اعمال محدود و مخصوص تھے لیکن اب ہر وہ شخص جو تھوڑی بہت کمپیوٹر کی معلومات رکھتا ہے اپنا فن پیش کر رہاہے ان میں بہت سے ایسے حضرات بھی ہونگے جو خود کے ذاتی تجربات کے بعد ہی کچھ علمی مواد پیش کرتے ہوں گے لیکن اکثریت ان میں ایسی ہے جنہیں خود آج تک کھڑے کھوٹے کی سمجھ نہیں ۔ شاید یہی وجہ ہے کہ اب ایسی ویڈیوز دیکھنے کو ملتی ہے کہ تین منٹ میں ہر حاجت پوری کرلیں صرف فلاں آیت اتنی مرتبہ پڑھ لیں اور پھر دیکھیں کمال ۔ اثرات کلام الہی سے انکار ممکن نہیں لیکن  اگر اعمال کے اثرات اس قدر عام ہوتے تو آج دنیا میں موجودہ حالات جس قدر تباہی کی جانب جا رہے ہیں ، اس سے زیادہ بد تر حالات ہوتے  ، بات بات پر لوگ دشمنی کے اعمال انجام دیتے اور اپنے دشمنوں کو گھروں سے بے گھر ، ذلیل و رسوا کرتے پھرتے ۔ ہر دوسرا فرد راہ چلتی دوشیزہ کو دیکھ کر اپنا دل ہار بیٹھتا اور پھر بزور طاقت عمل اس دوشیزہ کی حاضری کا عمل کرکے اس کا جینا حرام کردیتا ۔ تمام محکمے ختم ہوجاتے اور تمام کام بذریعہ عملیات لیا جاتا، چوروں کی شناخت ایک ہی عمل سے ممکن ہوجاتی بلکہ عمل کے ذریعہ چور خود آکر اقرار جرم کرتا پھرتا کہ جی میں نے ہی چوری کی ہے ، انصاف کے لئے کسی عدالت کا دروازہ نہیں کھٹکھٹانا پڑتا بلکہ چند دنوں کے عمل سے ہی انصاف خود چل کر گھر آتا۔ 

دنیا کا ہر شخص جانتا ہے کہ لوہے سے ہی تلوار بنتی ہے ، چھڑی بنتی ہے اور بے شمار دیگر اشیاء بھی ۔ کیا ہر شخص لوہے سے چھڑی ، تلوار یا ان دیگر اشیاء کو بنا سکتا ہے ؟ یا چھڑی بنا کر میدان جنگ میں اتر کر اس سے تلوار کا کام لے سکتا ہے ؟ نہیں اور ہرگز نہیں ۔ بعینہ یہی حال عملیات کا ہے ۔ جس کی سب سے پہلی شرط ہی استحقاق ہے ۔ سائلین کے سوالات و خواہشات کو دیکھا جائے تو ان میں ستر فیصد حضرات و خواتین وہ ہیں جو استحقاق ہی نہیں رکھتے اور   حصول حاجت کے لئے کوشاں ہیں اگر استحقاق کی شرط پوری ہوبھی جائے تو پھر آگے بات آتی ہے لوازمات و قواعد کی ، ان موضوع پر کئی مضامین میں گاہے بگاہے لکھتا رہا ہوں ۔  اس لئے فی الحال کسی قواعد پر بات نہیں کروں گا ۔صرف عمل پیش کروں گا قواعد عملیات و لوازمات کا خیال رکھیں اور تیار کریں پھر دیکھئے کہ حروف کی یہ غیر مرئی قوت کس طرح اپنا اثر ظاہر کرتی ہے ۔ 

 

Naqsh Baraey Shadi | نقش برائے شادی

آپ جفر آثار کے قواعد پر تحریر پڑھ رہے ہیں یقیناً آپ کے علم میں یہ بات ہوگی کہ جفر آثار کا تعلق وقت کی سعادت و نحوست سےبہت گہرا ہے جہاں وقت کی بات ہو وہاں نظرات سیارگان انتہائی اہمیت کی حامل ہوا کرتی ہیں یاد رکھیں کہ تسدیس و تثلیث کی نظرات رکاوٹوں کو دور کرنے اور بندشوں کو کھولنے میں انتہائی اہمیت کی حامل ہیں ۔ قمر ، مریخ ، زہرہ و زحل میں سے کسی بھی دو سیاروں کی سعد نظر سے اس عمل کو تیار کرنے کے لئے استفادہ کیا جا سکتا ہے۔ مسئلہ کی نوعیت کے اعتبار سے دو سیارگان کا انتخاب کریں اور دونوں میں باہم بننے والی سعد نظر تسدیس یا تثلیث کا وقت تلاش کریں ۔ اب اس وقت سے پیشتر اپنا تمام حسابی عمل تیار کرکے رکھ لیں اور نظر کے عین تکمیل کے وقت چار نقوش تیار کریں ۔


یہ عمل ان لوگوں کے لئے جو بیٹی کی شادی کے لئے پریشان ہیں کہ یا تو رشتہ نہیں آتا یا بات چلتے چلتے رک جاتی ہے یا کوئی موزوں رشتہ نہیں مل پا رہا ہو

 

 

سب سے پہلے سورہ طہ کے اعداد ابجد قمری سے حاصل کریں 

حاصل مجموعہ میں لڑکی کے نام کے اعداد مع والدہ شامل کریں 

کل مجموعہ سے نقش مربع پُر کریں نقش مربع پُر کرنے کا طریقہ کئی مرتبہ دیا جا چکا ہے اس لئے دوبارہ نہیں دہرایا جا رہا 

نقش مربع کس عنصر کے تحت تیار کیا جائے گا یہ جاننے کے لئے لڑکی کے نام کو بسط حرفی کرکھ لیں ۔ عناصر اربعہ پر تقسیم کریں جس عنصر کے حروف تعداد میں زیادہ ہوں اس عنصر سے مربع کریں گے 

چار نقوش آپ نے تیار کرلئے ۔ 

ایک لڑکی کے گلے میں بطور تعویذ پہنا دیں 

دوسرا پھلدار درخت سے باندھیں 

تیسرا نقش سورہ طہ کھول کر اس میں رکھ دیں 

چوتھا نقش کسی حرارت والی شے کے قریب رکھیں جیسے گھر میں اگر کسی ٹیوب لائٹ یا کسی انرجی سیور کا استعمال ہے تو کسی دھاگہ کی مدد سے اس کے قریب لٹکا دیں کہ اس سے پیدا ہونے والی حرارت نقش کو ملتی رہے 

نام کا مفرد عدد معلوم کرلیں مثلاً اگر کسی کے نام کے اعداد ابجد قمری سے 210 ہیں تو مفرد عدد 3ہوگا۔

اب روزانہ اس مفرد عدد کے مطابق بوقت فجر سورہ طہ کا ورد کریں ۔

چاروں نقوش کے نیچے مقصد مختصراً لکھ دیں جیسے فلاں بنت فلاں کی جلد شادی ہو وغیرہ۔

عمل کا ورد 11 ، 21 ، یا 40 دنوں تک کیا جائے گا والدین بھی یہ عمل تیار کرکے ورد خود بھی کر سکتے ہیں بچیوں کی نیت سے ۔

اگر 11 دن سے قبل رشتہ طے ہوجائے تو 11 دن مکمل کریں 11 دن ہوگئے اثر ظاہر نہ ہوا تو عمل موقوف نہ کریں جاری رکھیں اور اکیس دن ہونے دیں اس دوران رشتہ طے ہوجائے تو 21 یوم مکمل کئے جائیں گے اکیس یوم کے بعد بھی کامیابی کے اثرات ظاہر نہ ہوئے تو چالیس یوم مکمل کریں انشاء اللہ قوی اثرات ظاہر ہونگے ۔ 

خواتین ایام ناغہ بعد میں شمار کرکے مدت ایام عمل مکمل کریں ۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*