ایک آسان سہل مستحصلہ جفر ۔ علامہ شاد گیلانی مرحوم

mustehsila-ilm-e-jafar-shad-gillani-sawal-jawab

عالمان جفر کا کہنا ہے کہ ہر سوال کا جواب سوال کے اندر ہی پوشیدہ ہوتا ہے اور یہ بات غلط نہیں ہے عام طور پر جواب کی جھلک سوال ہی میں نظر آتی ہے مگر پھر بھی اپنی تسلی کے لئے مختلف قواعد کا استعمال کرکے جواب حاصل کیا جاتا ہے ۔

سوال کا جواب ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ سوال ہی میں ڈھونڈنے کے لئے چند ایک قواعد شائع کروا چکا ہوں جو قطعاً درست جواب دیا کرتے ہیں البتہ تعمق نظر کی ضرورت ہوتی ہے اور چند خصوصی رعایات سے ( جو جفار کو علم جفر نے دے رکھی ہے ) جواب یقینی طور پر برآمد ہو سکتا ہے اور یہ خصوصی رعایات ہیں ہمرتبہ حروف یا نظیرہ سے جواب پیدا کرنا اور حروف با معنی حاصل کرنا ۔۔۔۔۔۔

اعتراض کرنے والے لوگ ذرا ذرا سی بات کی میم میخ نکالنے کے عادی ہوا کرتے ہیں اور کہا کرتے ہیں کہ اس طرح سے کئی کئی جوابات بننے کا شائبہ ہوتا ہے مگر میں ان حضرات کی خدمت میں عرض کروں گا کہ جس قدر بھی جواب پیدا ہو سکیں گے وہ سب کے سب اسی سوال سے متعلق ہونگے اور اسی سوال کا حتمی فیصلہ ہونگے میں تو ایک اساس سے چار چار جواب نکالا کرتا ہوں اور سب کے سب اسی سوال سے متعلق ہوا کرتے ہیں البتہ آٹو میٹک قواعد میں نہ شائبہ ہوتا ہے نہ ہی کوئی وہم ۔ جو حرف آتا ہے وہ سوفیصد ایک ہی آتا ہے مگر صندل کا درد سر کے لئے مفید ہونا یقینی بات ہے البتہ اس کا گھسنا بھی تو سر درد ہی ہے اگر آٹو میٹک قواعد سے آپ لوگ دن بھر میں ایک سوال کا بھی جواب نکال لیں گے تو دوسرے سوال کے حل کرنے کی حاجت باقی نہ رہے گی میں نے اپنی زندگی میں بیسیوں قواعد سے کام لیا ہے اور بات یہ اخذ کی ہے کہ جو جواب آٹو میٹک قواعد سے ایک گھنٹہ کے بعد مجھے حاصل ہو سکتا ہے وہی بات آسان قواعد سے دو منٹ کے اند رہی مجھے مل سکتی ہے جس شخص کو فرصت ہو وقت ملے اور جفر سے عشق بھی ہو وہ جو قاعدہ چاہے دل لگی کا اظہا کرے ۔

مگر مجھ جیسے عدیم الفرصت انسان کے لئے عظیم قواعد سے سوالات حل کرنے کا وقت ہے نہ ضرورت !

میں نہایت سادہ اور آسان قواعد سے ہی سائل کے سوال کا جواب دو منٹ میں دے دیا کرتا ہوں اسی قبیل کا ایک آسان قاعدہ آج قارئین کی نظر کر رہا ہوں یہ قاعدہ میرا شب و روز کا معمول ہے ۔ قاعدہ صرف اتنا ہے کہ سوال لکھ کر مدخل کبیر حاصل کریں اور اس مجوعہ کو تین بار 2۔2 پر تقسیم کردیں ۔ اگر کس ایک بچے تو اسے تلف کردیں اور جو اعداد حاصل ہوں ان کو ایک لائن میں لکھ کر ایقغ سے جواب بنا لیں یقینی جواب ہوگا اور ایسا سہل قاعدہ آپ کی نظر سے پہلے کبھی نہ گزرا ہوگا ۔

سوال :۔ پاکستان میں سوشلزم کا نفاذ ہوگا یا نہ
2027 ۔۔۔ اسے 2 پر تقسیم کیا 1013۔۔۔ باقی رہا ایک ۔ جسے تلف کر دیا

1013۔۔۔۔۔۔۔ اسے بھی دو پر تقسیم کیا 506۔۔۔۔۔ باقی رہا ایک ۔۔ اسے بھی تلف کردیا

506۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ اسے بھی دو پر تقسیم کیا ۔۔۔۔ 253
253۔۔۔۔۔۔

shad-gilani-jafar-sawal-jawab-1

shad-gilani-jafar-sawal-jawab-2

یہ تحریر جناب مرحوم و مغفور سید غلام عبا س شاد گیلانی کی ہے جو انیس سو چھتر کے ایک فلکی رسالہ میں شائع کی گئی تھی
ذاتی طور پر مستحصلہ کبھی استعمال کرنے کا موقع نہیں ملا ۔ شائقین جفر مستحصلہ سے مستفید ہو کر اپنے خیالات و آراء کا اظہار کر سکتےہیں ۔  

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*